میرپور، ممنوعہ ادوایات کی فروخت پر میڈیکل سٹور سیل،مالک پابندسلاسل

میرپور(سیاست نیوز) اسسٹنٹ کمشنر یاسر ریاض نے ڈپٹی ڈرگ کنٹرولر اور پولیس کے ہمراہ پرانی ہٹیاں میں عبداللہ میڈیکل سٹورپر چھاپہ مارکرغیر قانونی ممنوعہ اور انڈین انرجی کی ادویات کی برآمدگی پر مالک کو گرفتار کر کے ممنوعہ ادویات ضبط کر لیں اور عبداللہ میڈیکل سٹور کو سیل کردیا۔تفصیلات کے مطابق ڈپٹی کمشنر راجہ طاہر ممتاز کی ہدایات پر اسسٹنٹ کمشنر یاسر ریاض نے شہر بھر میں مختلف میڈیکل سٹور کی اچانک چیکنگ کی۔دوران چیکنگ پرانی پٹیاں میں عبداللہ میڈیکل سٹور سے غیر ممنوعہ اور انڈین انرجی کی بڑی تعداد میں ادویات کی برآمدگی پر مالک سٹور کو گرفتار کر لیا اور خلاف ورزی کرنے پر مقدمہ قائم کر دیا اس طرح شہر کے دیگر میڈیکل سٹور کی چیکنگ کے دوران ادوایات کے معیار اور برانڈکی بھی پڑتال کی گئی، دوران پڑتال ادوایات کی کمپنیوں اور زائد المعیاد ادوایات کی پڑتال کی گئی اس طرح ادویات کے لئے مقرر کردہ ٹمپریچر برقرار نہ رکھنے والے میڈیکل سٹورز کو وارننگ دیتے ہوئے کہا کہ اگر آئندہ مقرر کردہ ٹمپریچر کا خیال نہ رکھا گیا تو ان کے سٹور سیل کردیئے جائیں گے۔اسسٹنٹ کمشنر یا سر ریاض کا مذید کہنا تھا کہ میڈیکل سٹور ز کی چیکنگ مریضوں کے علاج معالجہ کے لئے رکھی گئی ادویات اورعوام الناس کے وسیع تر صحت کے مفاد میں کی جارہی ہے بعض میڈیکل سٹورز کے خلاف شکایات ملی ہیں کہ وہ ادوایات کی آڑ میں نوجوان نسل کو خراب کرنے،خود ساختہ طاقت پیدا کرنے اور دیگر ممنوعہ ادویات فروخت کررہے ہیں جن پر زائد المعیاد ہونا بھی درج نہیں ہوتاان ممنوعہ ادویات سے بیشتر افراد مختلف معاشرتی برائیوں میں مبتلا ہورہے ہیں ان کے استعمال سے گردے اور مثانے سمیت دیگر انسانی اعضاء بھی کام کرنا چھوڑ دیتے ہیں جن کا علاج بھی ممکن نہیں۔انہوں نے کہا کہ ضلعی انتظامیہ نے فیصلہ کیا ہے کہ انسانی صحت اورجانوں کے خلاف کاروبار کرنے والوں کو کیفر کردار تک پہنچایا جائے

متعلقہ خبریں