یوم پاکستان اہم سنگ میل، منزل تک جدوجہد جاری رہے گی، صدر وزیراعظم

مظفرآباد (سیاست نیوز) آزاد جموں و کشمیر کے صدر سردار محمدمسعود خان نے کہا ہے کہ 23مارچ کا دن اہل پاکستان اور ریاست جموں و کشمیر کے مسلمانوں کی تاریخ میں ایک سنگ میل کی حیثیت رکھتا ہے۔ یہ وہ دن ہے جب ہمارے سیاسی اکابرین نے قائداعظم محمد علی جناح کی قیادت میں مسلمانان برصغیر کے لیے ایک علیحدہ خود مختار مملکت کا خاکہ پیش کیا تھا۔ یہ دن اہل کشمیر کے لیے اس اعتبار سے بھی اہمیت کا حامل ہے کہ 23 مارچ 1940کے دن لاہور میں ہونے والے تاریخ ساز اجتماع میں اہل کشمیر کے نمائندگان نے بھی شرکت کر کے اپنی سیاسی منزل اور مستقبل کا تعین کیا تھا جس کی توثیق بعد میں 19 جولائی 1947 کو الحاق پاکستان کی قرار داد کی منظوری کی صورت میں کی گئی تھی۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے یوم پاکستان کے مو قع پر اپنے خصوصی پیغام میں کیا۔ صدر آزادکشمیر نے کہا کہ یہ ایک ناقابل تردید حقیقت ہے کہ ریاست جموں و کشمیر جغرافیائی، تاریخی،تہذیبی، لسانی اور ثقافتی رشتوں کی بنیاد پر پاکستان کا حصہ ہے۔ہمیں اس بات میں کوئی ابہام نہیں کہ کشمیر کے بغیر پاکستان نا مکمل ہے اور پاکستان کے بغیر کشمیریوں کی کوئی پہچان نہیں۔ انہوں نے کہا کہ مقبوضہ کشمیر میں گزشتہ کئی دھائیوں سے مسلمانان ریاست کا قتل عام، خواتین کے تقدس کی پامالی سیاسی رہنماؤں اور کارکنوں کا بے دریغ قتل اور زیر حراست ہلاکتوں کا ایک لامتناہی سلسلہ جاری ہے۔ہزاروں کی تعداد میں لوگ بے پناہ تشدد کی وجہ سے معذور ہو چکے ہیں اور انسانی حقوق کی پامالی روز کا معمول بن چکا ہے۔ اس کے باوجود ہماری تحریک آزاد ی میں کوئی کمی آئے گی اور نہ ہی کشمیری عوام اپنے حق خود اردیت کی جدوجہد سے کبھی دستبردار ہوں گے۔ بھارتی حکام کا اہل کشمیر کو خوفزدہ کرنے اور انہیں اپنی دائمی غلامی میں رکھنے کے تمام حربے ناکام ہو چکے ہیں۔انہوں نے کہا کہ وقت کا تقاضا ہے کہ ہم ملی جذبہ کے ساتھ سازشوں کا مقابلہ کرکے پاکستان کو معاشی اور دفاعی لحاظ سے ایک مضبوط ملک بنائیں۔انہوں نے کہا کہ بھارت زیادہ دیر تک کشمیریوں کو غلام نہیں رکھ سکے گا۔ انشاء اللہ وہ دن جلد آنے والا ہے جب بھارت ریاستی عوام کو ان کا حق خود ارادیت دینے پر مجبور ہو گا

متعلقہ خبریں