مظفرآباد(سیاست نیوز)پرائس کنٹرول کمیٹی سرکاری انراخ پر عملدرآمد کرانے میں ناکام،ماہ مقدس میں شہری گراں فروشوں کے ہاتھوں لٹنے لگے،سستے رمضان بازاروں کے نام پر بھی وزیراعظم کی آنکھوں میں دھول جھونکی جانے لگی۔بلدیہ کے زیر اہتمام سستے رمضان بازاروں میں شہریوں کے ساتھ فراڈ کیا جارہا ہے اور سرکاری نرخ نامے پر عملدرآمد نہیں ہورہا۔سبزیات اور فروٹ غیر معیاری ہیں جبکہ بقیہ اشیائے ضروریہ ان بازاروں میں دستیاب ہی نہیں ہیں۔رمضان بازاروں میں ایک مخصوص جماعت کے کارکنوں کا قبضہ دیا گیا ہے تاکہ رمضان بازار ناکام ہوں اور تحریک انصاف کی حکومت پر عوام تنقید کریں۔تفصیلات کے مطابق پرائس کنٹرول کمیٹی سمیت دیگر ادارے ماہ مقدس میں بھی شہریو کو معیاری اور سستی اشیاء فراہم کرنے میں ناکام ہوچکے ہیں۔رمضان المبارک سے قبل ہی دارالحکومت میں گراں فروشوں نے من مانے انراخ مقرر کررکھے ہیں مگر کوئی پوچھنے والا نہیں ہے۔بلدیہ مظفرآباد کی ملی بھگت سے قصابوں نے گوشت کے انراخ میں 100روپے فی کلو اضافہ کردیاہے جبکہ مرغ فروش بھی سرکاری نرخ نامے کے مغائر مرغ فروخت کررہے ہیں۔سبزی اور فروٹ کی قیمتیں آسمان سے باتیں کررہی ہیں۔راولپنڈی اور مانسہرہ کی منڈیوں کے انراخ کو مد نظر رکھ کر سرکاری ریٹ جاری کیے جاتے ہیں مگر مظفرآباد منڈی میں سبزیوں اور فروٹ کے انراخ دوگنا سے بھی زائد ہیں۔اسی طرح مظفرآباد میں گھریلو سلنڈر بھی اوگرا کے جاری کردہ انراخ کے برعکس فروخت ہورہے ہیں۔اوگرا نے گھریلو سلنڈر کی قیمت 31سو روپے مقرر کررکھی ہے جبکہ صرف مظفرآباد شہر میں انتظامیہ نے گھریلو سلنڈر کی قیمت 37سو روپے مقرر کررکھی ہے۔پرائس کنٹرول کمیٹی اس وقت گراں فروشوں کی لونڈی بنی ہوئی ہے۔دارالحکومت واحد شہر ہے جہاں آزادکشمیر کے دیگر اضلاع کی نسبت مہنگائی دوگنا ہے۔سرکاری اداروں کے ذمہ داران کی سرپرستی میں گراں فروش شہریوں کو لوٹنے میں مصروف ہیں۔
مظفرآباد(سیاست نیوز)رمضان المبارک کے آغاز کے ساتھ ہی مہنگائی کی شدت میں اضافہ، اشیائے ضروریہ کے انراخ راتوں رات بڑھانے کیخلاف پرائس کنٹرول کمیٹی کی پراسرار خاموشی، ناجائز منافع خوری کی حوصلہ افزائی کے حوالے سے مرکزی ایوان صحافت کا غیر معمولی اجلاس، تاجروں، سول سوسائٹی کے ساتھ مل کر اشیائے خوررونوش کے قیمتوں کے تعین اور ان پر عملدرآمد کروانے کیلئے موثر کردار ادا کرنے کا فیصلہ، مارکیٹ اور منڈی کے انراخ میں تفاوت کا خاتمہ اور ضروریہ اشیائے صرف کی دستیابی یقینی بنانے کیلئے روزانہ مارکیٹوں کے معائنہ، انتظامیہ کے ساتھ مل کر چیکنگ، پرائس کنٹرول کمیٹی کی فعالیت یقینی بنانے پر اتفاق، ممبران پریس کلب پر مشتمل خصوصی کوریج کیلئے کمیٹیوں کی تشکیل، مرکزی ایوان صحافت کا غیر رسمی وغیر معمولی اجلاس گزشتہ روز ایوان صحافت کے کمیٹی روم میں منعقد ہوا جس میں اراکین پریس کلب کی بڑی تعداد شرکت کی اجلاس میں میزبانی کے فرائض مرکزی ایوان صحافت کے صدر واحد اقبال بٹ نے انجام دیئے، محرک اجلاس سینئر صحافی صدر ٹی وی جرنلسٹس ایسوسی ایشن آصف رضا میر نے رمضان المبارک کے آغاز کے ساتھ ہی دارالحکومت میں مہنگائی میں اضافے اور صارفین کی قوت خرید کے حوالے سے شرکاء اجلاس کو بریفنگ دی، آصف رضا میر کا کہنا تھا کہ اشیائے صرف کی قیمتوں میں راتوں رات اضافہ ناجائز منافع خوری ہے، رمضان المبارک کے دوران قیمتوں میں کمی کے بجائے غیر معمولی اضافہ نے غریب اور متوسط طبقے سے روٹی کا نوالہ تک چھین لیا ہے ایک طرف لوگ خالی پیٹ پانی کے ساتھ روزہ رکھنے پرمجبور ہیں تو دوسری طرف ناجائز منافع خور سال بھر کی کمائی رمضان المبارک سے حاصل کرنے کیلئے سرگرم ہو گئے ہیں۔ صحافیوں کی پیشہ وارانہ ذمہ داری ہے کہ وہ نیک نیتی اور دیانتداری کے ساتھ اپنے پیشہ وارانہ فرائض سرانجام دیتے ہوئے ناجائز منافع خوری کے سدباب کیلئے ارباب اختیارکی توجہ مبذول کرائیں، اس مقصد کیلئے پرائس کنٹرول کمیٹی کا موثر کردارناگزیر ہے، شرکاء اجلاس کو بتایا گیاکہ پرائس کنٹرول کمیٹی اور انتظامیہ کی ملی بھگت سے شہر کے اندر دودوھ، سبزی،پھل، گوشت، آٹے سمیت دیگر ضروری اشیاء من مانے انراخ پر فروخت کی جا رہی ہیں۔ پرائس کنٹرول کمیٹی اور انتظامیہ کے غیر فعال ہونے کی وجہ سے صارفین کو دونوں ہاتھوں سے لوٹا جا رہا ہے، اس ماحول میں صحافیوں کا بھی یہ فرض ہے کہ وہ اپنا مثبت اور جاندار کردار ادا کرتے ہوئے شہر کے اندر جاری لوٹ مار اور ناجائز منافع خوری کی حوصلہ شکنی کریں اور اس حوالے سے ذمہ داران، انتظامیہ و پرائس کنٹرول کمیٹی کے ساتھ مل کر لائحہ عمل تیار کیا جانا چاہیے۔ مظفرآباد میں سبزی و فروٹ منڈی نہ ہونے کی وجہ سے مارکیٹ اور منڈی کی قیمتوں کا تعین نہیں ہو پا رہا، ضروری ہے کہ قریبی علاقوں مانسہرہ، ایبٹ آباد اور راولپنڈی کی سبزی اور فروٹ منڈیوں سے روزانہ کی بنیاد پر پھلوں اور سبزیوں کے ریٹس منگوائے جائیں اور پرائس کنٹرول کمیٹی مظفرآباد منڈی کے انراخ کو مدنظر رکھتے ہوئے اشیاء صرف کی روزانہ کی بنیاد پر قیمتیں مقرر کرے جن پر سختی سے عملدرآمد کروایا جائے، اجلاس کے شرکاء نے پرائس کنٹرول کمیٹی، انتظامیہ، سول سوسائٹی اور تاجروں کے ساتھ مل کر رمضان المبارک کے دوران اشیائے ضروریہ کی سستے داموں دستیابی یقینی بنانے کیلئے اپنا فعال کردار ادا کرنے پر رضامندی ظاہر کی، باہمی مشاورت سے اجلاس کے دوران پانچ نکات پر پیداہونے والے اتفاق رائے کی روشنی میں مظفرآباد مرکزی ایوان صحافت کی جانب سے عملدرآمد کے لیے فوری موثر کردار ادا کرنے پر اکتفا کیا گیا، اور طے کیا گیا کہ مختلف علاقوں میں صحافتی رپورٹنگ ٹیمیں روزانہ کی بنیاد پر انراخ اور اشیائے صرف کی دستیابی کے حوالے سے بازاروں میں جا کر صورتحال کا جائزہ لیں گی اور پرائس کنٹرول پر عمل درآمد نہ ہونے کی صورت میں میڈیا کے ذریعے ارباب اختیار کی توجہ مبذول کروائی جائے گی، اجلاس میں یہ بھی طے کیا گیا کہ ایسی اشیائے صرف جن کی قیمتیں کم نہیں ہوں گی ان کا استعمال نہ کرنے کیلئے بائیکاٹ مہم بھی چلائی جائے گی، تمام اخبارات، سوشل میڈیا کارکنان اور الیکٹرانک میڈیا روزانہ کی بنیاد پر پرائس کنٹرول کمیٹی کی کارکردگی اور اشیائے صرف کی دستیابی کے حوالے سے رپورٹنگ یقینی بنائیں گے، اور اخبارات اس رپورٹنگ کی نمایاں اشاعت یقینی بنائیں گے۔

متعلقہ خبریں