مظفرآباد(سٹاف رپورٹر)تحریک انصاف آزادکشمیر کی پارلیمانی پارٹی کا ایک خصوصی اجلاس پارلیمانی لیڈر خواجہ فاروق احمد کی سربراہی میں منعقد ہوا،جس میں پارٹی صدر سردار عبدالقیوم خان نیازی نے خصوصی طورپر شرکت کی۔اجلاس میں پی ڈی ایم کی حکومت کی جانب سے اسمبلی کا اجلاس نہ بلائے جانے
پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ جب سے حکومت قائم کرائی گئی ہے تو عام آدمی سے متعلقہ مسائل پر غور وخوض کرنے کے بجائے اپنی کمزور حکومت کومصنوعی سہارا دینے کیلئے وزراء کی تعداد دوگنی کرنے،مشیران،معاونین خصوصی کو فلیگ ہولڈر کادرجہ دینے اور مراعات میں اضافہ کرنے کے حوالے سے اقدامات پر ہی زیادہ توجہ دی جارہی ہے۔حکومت نے مستقل ڈیرے کشمیر ہاؤس اسلام آباد میں لگائے ہوئے ہیں۔حکومت اسمبلی کا اجلاس بلائے جانے سیاس لیے گریز کررہی ہے کہ اسمبلی میں پی ٹی آئی کی جانب سے شدید مزاحمت کا سامنا کرنا پڑے گا۔صدر جماعت سردار عبدالقیوم خان نیازی نے پی ٹی آئی کے حکومتی اراکین سے رابطہ کرنے کے لیے پارلیمانی لیڈر خواجہ فاروق احمد کی سربراہی میں ایک کمیٹی تشکیل دیدی ہے جس میں سردار فہیم اختر ربانی،حافظ حامد رضا اور مقبول گجر شامل ہیں۔یہ کمیٹی پی ٹی آئی کے ان اراکین سے رابطہ کرے گی جو غلطی سے پی ڈی ایم کی حکومت کی تشکیل میں معاون بن گئے ہیں لیکن اب اگر انہیں اپنی نادانستہ غلطی کااحساس ہوگیا ہے تو انہیں مکمل عزت واحترام کے ساتھ واپس اپنی جماعت پی ٹی آئی میں لایا جائے۔اجلاس میں یہ فیصلہ بھی کیا گیا کہ پی ٹی آئی کی پارلیمانی پارٹی کا اجلاس 6مئی بروز ہفتہ شام 7بجے اسلام آباد منعقد کیا جائے گاجس میں اہم فیصلے متوقع ہیں۔اجلاس میں اس امر پر اطمینان کا اظہار کیا گیا کہ صدر جماعت سردار عبدالقیوم خان نیازی کا جس طرح صدرمنتخب ہونے کے بعد پہلی بار مظفرآباد آمد پر استقبال کیا گیا ہے سے ثابت ہوتا ہے کہ عوام عمران خان کے ویژن کے ساتھ ہیں اور پی ڈی ایم کی حکومت کو جس طرح راتوں رات قائم کیا گیا ہے کو قبول نہیں کرتے اس لیے ابھی تک حکومت اپنے قدموں پر کھڑے ہونے کی پوزیشن میں ہی نہیں آرہی۔حکومتی اراکین اسمبلی کو اپنے اپنے حلقہ انتخاب میں شدید عوامی مزاحمت کاسامنا کرنا پڑرہاہے اور مسلم لیگ ن نے اسی عوامی دباؤ کے تحت وزراء کی تعداد میں اضافہ کرنے کے لیے آئینی ترمیم سے ہاتھ پیچھے کرلیا ہے کہ ان کے اراکین کو عوامی دباؤ کا جواب دینے کا حوصلہ ہی نہیں اور آئندہ دنوں میں مزید کئی اراکین اسمبلی سجدہ سہو کرلیں گے۔

متعلقہ خبریں